''قوم کا پیسہ قوم ہی پر خرچ کیا جائے گا''

''قوم کا پیسہ قوم ہی پر خرچ کیا جائے گا''

     تحریر: طاہر شاہ

ضلع دیر لوئر کی تحصیل تیمرگرہ کے ایک معزز اور ممتاز سماجی خاندان سے تعلق رکھنے والے وزیر اعلٰی خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے جیل خانہ جات ملک شفیع اللہ خان ماضی میں بحیثیت ایک اعلٰی پولیس آفیسر اپنی صلاحیتوں، فرض شناسی اور ایمانداری کے محکمہ پولیس کے لئے شاندار خدمات انجام دینے کے بعد اب میدان سیاست میں بھی اپنی گرانقدر خدمات کی بدولت جس قدر تیزی سے شہرت اور عوامی مقبولیت کی بلندیاں طے کر رہے ہیں۔ وہ نہ صرف اپنے علاقے ضلع دیر میں بلکہ پورے صوبے خیبر پختونخوا میں ایک جانا پہچانا نام بن چکا ہے۔ 

روزنامہ شھباز کے ساتھ گزشتہ دنوں اپنی رہائش گاہ سدو ہاؤس پر ایک خصوصی انٹرویو کے دوران ملک شفیع اللہ خان نے بتایا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت خان صاحب کے وژن کے مطابق نعروں پر نہیں عملی اقدامات پر یقین رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ صوبائی حکومت نے انتہائی مشکل دور میں وسائل کی کمی اور درپیش گونا گوں چیلنجز کے باوجود وزیر اعلٰی محمود خان کی مدبرانہ قیادت میں گڈ گورننس کی شاندار مثال قائم کر دی ہے اور صوبہ بھر میں ریکارڈ ترقیاتی کاموں کا جال بچھا دیا گیا ہے۔ ملک شفیع اللہ خان نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ ملک کی سیاسی تاریخ میں پہلی بار موجودہ حکومت کے تمام سرکاری اداروں میں کرپشن، بدعنوانیوں، ڈی میرٹ اور رشوت خوری کلچر کا مکمل طور قلع قمع کر دیا گیا ہے اور سرکاری محکموں میں ہر کام قواعد و ضوابط کے مطابق اور میرٹ کی بنیادوں پر ہوتا ہے جس سے حق تلفی اور استحصال کی روایات ختم ہو چکی ہیں۔ معاون خصوصی برائے جیل خانہ جات کا کہنا تھا کہ ضلع دیر لوئر کے عموماً اور باالخصوص اپنے حلقہ پی کے پندرہ تیمرگرہ کے عوام کو تعلیم، صحت ، روزگار اور دیگر بنیادی سہولیات کی فراہمی اُن کی اولین ترجیحات ہیں۔ 

 

ملک شفیع اللہ خان نے کہا کہ اپنے حلقہ انتخاب کے عوام کے مسائل دور کرنا اُن کا عزم اور اس سلسلے میں اُن کی جدوجہد اور کوششوں کے نتیجے میں پی کے پندرہ تیمرگرہ دیر لوئر میں ترقی و خوشحالی کا نیا دور شروع ہو چکا ہے جس کے ثمرات سے جلد عوام مستفید ہو جائیں گے۔ اُنہوں نے کہا کہ اُن کی کوششوں سے تیمرگرہ اربن  کونسل کے بنیادی مسائل حل کرنے کیلئے بہتر (72) کروڑ روپے کی لاگت سے تیمرگرہ بیوٹی فیکیشن کے نام سے منصوبہ منظور کر کے اس پر کام بھی شروع ہوا ہے جس کی تکمیل سے تیمرگرہ اربن کونسل ترقی یافتہ شہروں کی صف میں شامل ہو کر ایک خوبصورت، دلکش اور صاف ستھرا علاقہ اُبھرے گا۔ معاون خصوصی نے کہا کہ اربن کونسل تیمرگرہ کے مسائل میں لوگوں کو درپیش مسئلہ صاف پینے پانی کا مسئلہ بھی شامل ہے جس کیلئے اُن کی کاوشوں سے صوبائی حکومت نے ایک ارب تیس کروڑ روپے کی لاگت سے تیمرگرہ گریوٹی واٹر سکیم جیسا میگا پراجیکٹ منظور کر لیا ہے، ''اس منصوبے سے تیمرگرہ اربن کونسل دیہات کے عوام کو درپیش صاف پینے پانی کا مسئلہ ہمیشہ ہمیشہ کیلئے حل ہو جائے گا۔'' 

 

ملک شفیع اللہ خان کا کہنا تھا کہ ضلعی صدر مقام تیمرگرہ دیر، چترال اور ضلع باجوڑ کا ٹریفک باب ہونے کے باعث تیمرگرہ میں ٹریفک مسائل گھمبیر صورتحال اختیار کر چکے ہیں، صوبائی حکومت تیمرگرہ شہر پر پانچ اضلاع کے بڑھتے ہوئے ٹریفک دباؤ کو کم کرنے اور لوگوں کو درپیش مشکلات کے خاتمہ کی غرض سے شھید چوک تیمرگرہ میں فلائی اور جبکہ دریائے پنجکوڑہ پر تیمرگرہ کنڈرو دوہری پُل کی تعمیر کیلئے ستاون کروڑ روپے منظور کر چکی ہے اور ان منصوبو ں پر عنقریب کام شروع کیا جائے گا۔ اُنہوں نے کہا کہ ضلع دیر لوئر میں تیمرگرہ میڈیکل کالج منصوبہ موجودہ پی ٹی آئی حکومت کا مثالی کارنامہ ہے، تیمرگرہ میڈیکل کالج منصوبے کی تکمیل سے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال تیمرگرہ کو ٹیچینگ ہسپتال کا درجہ ملنے سے علاقے کی عوام کو گھر کی دہلیز پر صحت سہولیات فراہم ہوں گی، اور عوام کو ضلع دیر عوام بشمول چترال اور باجوڑ کے مریضوں کو پشاور اور اسلام آباد لے جانے سے نجات حاصل ہو جائے گا۔ 

 

وزیر اعلٰی کے معاون خصوصی نے بتایا کہ ملاکنڈ ڈویژن کے سب سے بڑے نہری منصوبے گوپلم ایریگیشن سکیم کی بھی منظوری دی گئی ہے، اس کیلئے حکومت 7.5 ارب روپے مختص کر چکی ہے۔ ملک شفیع اللہ خان کا کہنا تھا کہ گوپلم ایریگیشن سکیم ضلع دیر پائین عوام کا ایک خواب تھا جسے پی ٹی آئی حکومت نے پورا کر دیا۔ اُنہوں نے کہا کہ گوپلم ایریگیشن سکیم سے ضلع دیر لوئر کے وسیع پیمانے پر بنجر اور غیرآباد اراضیات سیراب ہونے سے پورے ملاکنڈ دویژن میں ایک شاندار زرعی انقلاب آئے گا جس سے علاقے کے لوگ معاشی، اقتصادی اور سماجی طور ترقی و خوشحالی سے ہمکنار ہو سکیں گے۔ معاون خصوصی نے اپنے حلقے میں ترقیاتی کاموں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ پی کے پندرہ تالاش میں اُنہوں نے گرلز ڈگری کالج کی تعمیر کیلئے پینتالیس کروڑ اور پینتیس لاکھ روپے منظور کرائے ہیں جس سے علاقے میں تعلیم نسواں کو فروغ ملے گا۔ اُن کے حلقہ نیابت کی ہر ویلج کونسل میں سے تین کلومیٹر پختہ سڑکوں کی تعمیر اور درجنوں بور ویل (کنویں) کھودے گئے ہیں۔ ملک شفیع اللہ خان نے بتایا کہ وہ ایک کلومیٹر خونگی اور پیٹو درہ روڈ تعمیر و توسیع کیلئے کروڑوں روپے منظور کرانے کے علاوہ تودہ چینہ میں تیس کلومیٹر روڈ کی تعمیر و مرمت ملاکنڈ پائین درہ، خدنگوں تالاش، ترئی، باجوڑو، چینو، بانڈہ تالاش اور درمدال تالاش میں بھی لنک روڈ کی تعمیر و مرمت کیلئے کروڑوں روپے خرچ کر چکے ہیں۔ معاون خصوصی جیل خانہ جات نے کہا کہ صوبائی حکومت اُن کی سفارشات کے نتیجے میں اُن کے حلقہ انتخاب پی کے پندرہ تحصیل تیمرگرہ میں سات سکولوں کی تعمیر کرا چکی ہے جن میں سدو پرائمری سکول، تیمرگرہ سنٹینینٹل ماڈل سکول فار بوائز، خونگی ہائی سکول، ڈھیری تالاش کوہیرے، ماشو دوشخیل اور پیٹو درہ ہائی سکول کی تعمیر شامل ہے۔ 

 

ملک شفیع اللہ خان نے بتایا کہ اُنہوں نے اپنے حلقہ انتخاب کی ہر ویلج کونسل میں برابری کی بنیادوں ترقیاتی کاموں پر پینتیس کروڑ خرچ کئے ہیں جبکہ آبنوشی کی پانچ ٹیوب ویلوں کی تعمیر پر کام جاری ہے۔ سال دو ہزار دس کے بدترین سیلاب سے متاثرہ دیہات دانوہ اور شگوکس میں نقصانات کی بحالی نو کیلئے سینتیس کروڑ خرچ کئے جائیں گے جبکہ وزیر اعلٰی تیمرگرہ میں پندرہ کروڑ روپے کی لاگت سے  سپورٹس کمپلیکس تعمیر کیلئے زمین خریدنے کی یقین دہانی کرا چکے ہیں جس کی تکمیل سے علاقے کی تقدیر بدل جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف عوام کے حقوق کی علمبردار پارٹی ہے اور پورے ملک میں عموماً اور صوبہ خیبر پختونخوا میں خصوصاً انقلابی تبدیلیاں لاکر دم لیں گے۔

 

ملک شفیع اللہ خان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی حکومت تیزی سے ورثے میں ملے ہوئے بحرانوں پر قابو پا رہی ہے جس سے ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہو چکا ہے۔ صوبائی معاون خصوصی نے کہا کہ ضلع دیر پائین خصوصاً اُن کے حلقہ انتخاب پی کے پندرہ تیمرگرہ میں خطیر رقوم کی لاگت سے مختلف ترقیاتی منصوبے شروع ہیں جن کی تکمیل سے علاقے میں تعلیم، صحت، مواصلات، زراعت، آبنوشی و دیگر شعبوں میں انقلابی تبدیلیاں آئیں گی اور اہل علاقہ کا معیار زندگی بلند ہو جائے گا۔ ملک شفیع اللہ خان نے کہا کہ موجودہ پی ٹی آئی حکومت خان صاحب کے وژن کے مطابق عوام سے کئے گئے وعدوں کو پورا کر رہی ہے اور اس مقصد کیلئے موجودہ حکومت عوام کو زندگی کی بنیادی سہولیات کی فراہمی اور اُن کے مسائل و مشکلات دور کرنے کیلئے انقلابی اقدامات اُٹھا رہی ہے جس کے مثبت نتائج برآمد ہو رہے ہیں۔ اُنہوں نے کہا کہ ترقیاتی فنڈز قوم کی امانت ہے اور قوم کا پیسہ قوم ہی پر خرچ کیا جائے گا تاہم وہ اپنے حلقے میں جاری ترقیاتی کاموں کے معیار پر کسی قسم کا سمجھوتہ کرنے کو تیار نہیں اور وہ کسی کو قوم کی امانت غلط اور ناجائز طریقے سے استعمال کرنے کی کسی صورت اجازت نہیں دیں گے۔