عوام کو اشتعال انگیزی کی ترغیب آئین کی خلاف ورزی ہے۔سردار حسین بابک

عوام کو اشتعال انگیزی کی ترغیب آئین کی خلاف ورزی ہے۔سردار حسین بابک

پشاور(نیوزرپورٹر)عوامی نیشنل پارٹی خیبرپختونخوا نے وزیراعلیٰ، گورنر اور دیگر حکومتی عہدیداران کی جانب سے عوام کو بغاوت پر اکسانے کیخلاف قرار دادصوبائی اسمبلی سیکرٹریٹ میں جمع کرادی ہے۔

 

اے این پی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک نے جمع کرائی گئی قرارداد میں کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ ،گورنر اور وزرا آئین پاکستان کے تحت لئے گئے حلف سے بغاوت کے مرتکب ہوئے ہیں، 

 

صوبائی حکومت نے خیبر پختونخوا ہائوس اسلام آباد کو  ایک دفعہ پھر مسلح اور مشتعل جتھوں کیلئے استعمال کرنے کی غرض سے مکمل قبضے میں لیا ہوا ہے ،

 

پختونخوا پر پچھلے ساڑھے 9 سالہ اقتدار میں مالی طور پر دیوالیہ بنانے والوں نے عوام کو کہیں کا نہیں چھوڑا، حکمران جماعت کے ممبران اسمبلی سوشل میڈیا پر عوام کو ہلڑ بازی اور اشتعال انگیزی کی ترغیب دینے کے کھلم کھلا اعلانات کر رہے ہیں،

 

قرار داد میں کہا گیا ہے کہ توڑ پھوڑ اور ہنگامے کرنے والوں کیخلاف کارروائی پرپختونخواپولیس نے خاموشی اختیار کی ہوئی ہے ،حکمران جماعت کو قانون اپنے ہاتھ لینے کے لئے پولیس کی سر پرستی میں صوبے کو شہر نا پرسان بنانے کے مترادف ہے

 

قرارداد کے متن میں مزید کہا گیا ہے کہ حکمران جماعت کے وزرا اور ممبرا ن مین شاہراہوں کو بند کر کے دہشت گردی اور مہنگائی کے ستائے ہوئے عوام کے زخموں پر نمک پاشی میں مصروف ہیں، 

 

صوبائی حکومت میں صوبے کے آئینی حقوق اور بدامنی کے خلاف آواز اٹھانے کی ہمت نہیں اور غریب عوام کی مشکلات میں اضافے کیلئے صبح وشام سوشل میڈیا کے زریعے مشتعل تبلیغ میں مصروف ہیں، 

 

صوبائی حکومت آئین پاکستان سے بغاوت کی مرتکب ہوئی ہے۔میڈیا ،عدلیہ ،پارلیمان اور انتظامیہ آئینی کردار ادا کرنے میں تا خیر نہ کریں،

 

سردار حسین بابک نے کہا کہ پختونخوا کی سرکا ری مشینری اور لانگ مارچ کے اخراجات کی صوبے کے خزانے سے ادائیگی کسی طور برداشت نہیں کر سکتے ،

 

انہوں نے کہا کہ پختونخواکے تاجروں ،کاروباری طبقہ ،مزدور تنظیمیں اور ہر طبقہ زندگی کے لوگ حکمرا ن جماعت کے سرکاری اختیا ر کے نا جائز استعمال کے خلاف آواز اٹھانے کا وقت ہے،صوبے کے عوام سیاست اور اقتدار کی جنگ میں ایندھن بنانے اور وسائل کے استعمال بارے حکمران جماعت سے پوچھ گچھ کریں گے،

 

انہوں نے کہا کہ پختونخواکو کرپشن کی آماجگاہ بنانے والوں سے عوام ایک ایک پائی کا حساب لیں گے۔