پی ٹی آئی نے حکومت کوذاتی جاگیرسمجھ رکھاہے۔سردار حسین بابک

پی ٹی آئی نے حکومت کوذاتی جاگیرسمجھ رکھاہے۔سردار حسین بابک

 

 پشاور( نیوز رپورٹر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و پارلیمانی لیڈرسرداربابک نے کہاہے کہ 2013سے انکے حلقہ نیابت کیساتھ زیادتی ہورہی ہے اس وقت بھی بونیرضلع 1122 ریکسیوسروس سے محروم ہے،

 

اسمبلی اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت اپوزیشن حلقوں کوفنڈمیں نظراندازکررہی ہے جسکی وجہ سے عوام کوسزادی جارہی ہے یہ عمل نقصان دہ ہے اگرحکومت سوچتی ہے کہ فنڈنہ دے کر عوام کی ہمدردیاں حاصل کرکے انہیں اپوزیشن سے متنفرکیاجائے تویہ ان کی خام خیالی اور دشمنی ہے، 

 

اے این پی دورمیں صبح شام دھماکے ہوتے تھے لیکن ہرجمعرات میں تمام ایم پی ایز جاتے تھے لیکن پچھلے دس سالوںسے اپوزیشن ممبران کا عزت نفس مجروح ہوئی ہے پی ٹی آئی نے حکومت کوذاتی جاگیربنارکھاہے، کرپٹ ترین ریٹائرڈسیکرٹری سی اینڈ ڈبلیوکے اثاثوں کی چھان بین کی جائے ،

 

اس موقع پرڈپٹی سپیکر محمودخان نے ایوان کی کارروائی کے دوران باربار خلل ڈالنے پر اے این پی رکن بہادرخان کو رولز227کے تحت وارننگ جاری کرتے ہوئے ایک بارپھرواضح کیاہے کہ انکی کرسی کو کوئی پریشرائزنہیں کرسکتا ،

 

معاون خصوصی ریاض خان نے جواب دیاکہ محرک رکن کے حلقہ میں کٹیگری ڈی ہسپتال بن رہاہے ،ڈگری کالج کی منظوری ہوچکی ہے سڑکوں پرکام جاری ہے پبلک ہیلتھ سیکٹرمیں کروڑوں روپے کی لاگت سے کام ہورہے ہیں کسی حلقے کیساتھ زیادتی نہیں ہوگی۔