ریاست مدینہ کی آڑ میں سادہ لوح عوام کو دھوکہ دیا گیا، مشتاق احمد 

 ریاست مدینہ کی آڑ میں سادہ لوح عوام کو دھوکہ دیا گیا، مشتاق احمد 

پشاور(سٹی رپورٹر )حلقہ خواتین جماعت اسلامی پاکستان خیبرپختونخوا کے زیر اہتمام اسلامک سنٹر میں دو روزہ تربیت گاہ برائے ناظمات اضلاع، زونز اور شعبہ جات کا انعقاد کیا گیا۔جس میں صوبہ خیبر پختونخوا کے اضلاع کی ناظمات اور دیگر ذمہ داران نے شرکت کی۔

 

امیر جماعت اسلامی صوبہ خیبر پختونخوا سینیٹر مشتاق احمد خان نے خصوصی شرکت کی اور حلقہ خواتین جماعت اسلامی کے ذمہ داران سے خصوصی خطاب کرتے ہوئے کہا کہ طاغوتی قوتیں ہر شعبہ میں اپنے پنجے جمانے کی کوشش میں مصروف ہیں، قومی اسمبلی اور سینٹ میں ہر دوسرے دن اسلام اور حب الوطنی کے تقاضوں کے خلاف بلز کی منظوری تشویش ناک ہے، ان حالات میں ہم سب کو اپنا مثبت کردار ادا کرنا ہوگا اور ہر ممکن طریقے سے باطل قوتوں کے سامنے بند باندھنا ہوگا۔حکومت ان قوتوں کے سامنے بے بس و لاچار نظر آرہی ہے ریاست مدینہ کی آڑ میں سادہ لوح عوام کو دھوکہ دیا گیا، اور اب حکومت الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے زریعے آیندہ انتخابات کو چوری کرنے کی کوشش کر رہی ہے، اور دوسری جانب کلبھوشن یادیو کو این آر او دے کر کشمیری عوام کی دل آزاری کر رہی ہے۔ہم اس سودے کے سراسر خلاف ہیں۔

 

نائب قیمہ پاکستان عنایت امین نے جماعت اسلامی میں انتخاب اور استصواب کے عنوان پر پروگرام کیا اور کہا کہ جماعت اسلامی پاکستان کی واحد جماعت ہے جو ملک کے ہر شعبہ میں اپنا بھرپور کردار ادا کر رہی ہے، نیز جماعت اسلامی کو بین الاقوامی سطح پر بھی غیر جانبدار قیادت کے انتخاب کے طریقہ کار پر سراہا گیا۔

 

ناظمہ صوبہ بلقیس مراد نے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آخرت میں ہم سب اپنے اپنے رعیت کے معاملے میں اللہ کے آگے جواب دہ ہوں گے۔آخرت کی جواب دہی کا احساس ہی ہم سب کو اپنے نصب العین کے حوالے سے مضبوط کرتا ہے۔ میں آیندہ اور دیگر میدانوں میں بھی آپ سب سے اسی طرح ردعمل کی امید کرتی ہوں۔انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات میں جماعت اسلامی کے اراکین کا کثیر تعداد میں بلا مقابلہ انتخاب قابل ستائش ہے۔ا

 

جلاس میں میڈیا کے درست استعمال، ٹائم منیجمنٹ اور بچوں کی تربیت کے عنوان پر ورکشاپ بھی ہوئے اجلاس کے اختتام پر قرارداد بھی پیش کی گئی جس کو متفقہ طور پر منظور کیا گیا۔ قرارداد میں حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ ریپ کے مجرم کو نامردی (Castration) کے بجائے اسکے اوپر شریعت کیمطابق حد کی سزا جاری کی جائے اور کورٹ آرڈر پر سرعام پھانسی دی جائے۔ یورپی یونین کی قرارداد کی روشنی میں پی ٹی آئی پارلیمنٹ سے قرآن وسنت اور دستور سے متصادم غیر اسلامی قانون سازی کر رہی ہے۔