عمران خان سمیت کابینہ ارکان کے فون ہیک کرنے کا انکشاف

عمران خان سمیت کابینہ ارکان کے فون ہیک کرنے کا انکشاف

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک +این این آئی)بھارت کی جانب سے وزیراعظم عمران خان سمیت کابینہ ارکان کے بھی فون ہیک کرنے کا انکشاف 'ذرائع کے مطابق بھارت اسرائیلی کمپنی کے سافٹ ویئر ''پیگاسس ''کے ذریعے وزیراعظم عمران خان سمیت کابینہ ارکان کی فون کالز اور میسجز ریکارڈکرنیکی کوشش کرتارہا ہے۔

 

بھارت کی جاسوسی پر اعلیٰ عسکری اور سول قیادت کی بیٹھک ہوئی ہے جس میں وزرا سمیت سرکاری افسران کے لیے واٹس ایپ طرزکی نئی ایپلیکیشن لانے پر مشاورت کی گئی 'حکومت کی جانب سے اس معاملے پر شدید تشویش کا اظہار کیا گیا ہے.

 

رپورٹس کے مطابق میڈیا کے 17 اداروں کی جانب سے جاری کی گئی تفتیشی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کم ازکم ایک مرتبہ عمران خان کے زیر استعمال رہنے والا موبائل نمبر بھارت کی فہرست میں تھا۔ واشنگٹن پوسٹ کے مطابق بھارت میں زیر نگرانی رہنے والے نمبروں کی تعداد ایک ہزار سے زیادہ ہے، جبکہ وزیراعظم عمران خان سمیت سیکڑوں نمبر پاکستان سے تھے۔

 

رپورٹ میں یہ واضح نہیں کیا گیا کہ آیا وزیراعظم عمران خان کے نمبر کی نگرانی کی کوشش کامیاب رہی یا نہیں۔

 

ذرائع کے مطابق سافٹ ویئراس وقت استعمال ہواتب عمران خان وزیراعظم نہیں تھے، ریکارڈ کے مطابق مختلف نمبرز میں ایک نمبر وزیراعظم عمران خان کے زیراستعمال تھا، اس کے علاوہ نواز حکومت میں یہی سافٹ ویئر حساس اداروں اور سیاست دانوں کیخلاف استعمال ہوا۔

 

وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے ان انکشافات پر ردعمل میں کہا کہ اس رپورٹ پر انتہائی تشویش ہے، مودی حکومت کی غیر اخلاقی پالیسیوں سے بھارت اور پورا خطہ خطرناک حد تک پولرائز ہوگیا ہے۔

 

وفاقی وزیر انسانی حقوق شیریں مزاری نے ٹوئٹ میں کہا کہ بھارتی حکومت کی اسرائیلی این ایس او پیگاسس کے ذریعے جاسوسی کرنے والی آمرانہ حکومتوں میں شامل ہونے کی نشاندہی ہوئی ہے۔