لیز پر دیئے گئے ریسٹ ہائوسز کی پالیسی' آمدنی و خرچ کی تفصیلات طلب 

لیز پر دیئے گئے ریسٹ ہائوسز کی پالیسی' آمدنی و خرچ کی تفصیلات طلب 

 

خیبرپختونخوا اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے محکمہ سیاحت، ثقافت، کھیل، آثارقدیمہ، میوزیم اور امور نوجوانان کا اجلاس گزشتہ روزکمیٹی کے چیئرمین و رکنِ صوبائی اسمبلی محمد ادریس کی زیرِ صدارت اسمبلی کانفرنس ہال پشاور میں منعقد ہوا۔

 

اجلاس میں ممبران کمیٹی و اراکین صوبائی اسمبلی سید فخر جہان، ساجدہ حنیف، زبیر خان، سردارخان، بہادر خان، شگفتہ ملک اور ایم پی اے سمیرہ شمس کے علاوہ ایڈیشنل سیکرٹری محکمہ سیاحت، ثقافت، کھیل، آثارقدیمہ، میوزیم، عجائب گھر اور امور نوجوانان، ڈپٹی سیکرٹری فنانس، ڈپٹی و اسسٹنٹ سیکرٹریز صوبائی اسمبلی، ڈائریکٹر سپورٹس ڈولپمنٹ، جنرل منیجر ثقافت و سیاحت،  ڈپٹی ڈائریکٹر امور نوجوانان، اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل، سیکشن آفیسر محکمہ قانون اور دیگر متعلقہ افسران بھی شریک ہوئے۔

 

 اس موقع پر صوبہ بھر میں قائم کل 169 ریسٹ ہاؤسزز، 19 پی ٹی ڈی سی موٹلز، تحصیل پلے گراونڈز ثمرباغ، منڈا اور مایار دیر لوئر، جبکہ ضلع نوشہرہ میں پہاڑی کٹھی خیل، پیرسباق اور جہانگیرہ سمیت کنڈ پارک اور ڈائریکٹوریٹ آف کلچر و کلچرل اینڈ ٹورزم اتھارٹی سے متعلق تفصیلات پر بحث ہوئی۔ 

 

چیئرمین کمیٹی محمد ادریس نے لیز پر دیے گئے تمام 15 ریسٹ ہاؤسزز سے متعلق لیز پالیسی، موصول آمدنی اور خرچ کی مکمل تفصیلات اگلے کمیٹی اجلاس میں پیش کرنے کے لیے احکامات جاری کیے۔

 

 انہوں نے لوئر دیر میں ثمرباغ اور منڈا کھیل کے میدانوں پر بالترتیب خرچ 50 لاکھ اور 80 لاکھ روپے کی تفصیلات بمعہ پی سی ون اگلے کمیٹی اجلاس میں پیش کرنے جبکہ پہاڑی کٹھی خیل اور جہانگیرہ پلے گراونڈز سے متعلق تفصیلات اگلے تین دن میں فراہم کرنے کے لیے حکام کوہدایات جاری کی۔

 

 انہوں نے کھلاڑیوں کی فلاح و بہبود جبکہ روایتی کھیلوں کے فروغ کے لیے محکمانہ اقدامات اور اسکی ضلع وائز تفصیلات پر بھی اگلے کمیٹی اجلاس میں ممبران کو بریف کرنے کے لیے احکامات جاری کیے۔