افغان جنگ کا واحد حل فریقین کے مابین مذاکرات ہے، زاہد خان

افغان جنگ کا واحد حل فریقین کے مابین مذاکرات ہے، زاہد خان

اسلام آباد(این این آئی)عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی ترجمان زاہد خان نے کہا ہے کہ افغانستان میں جاری جنگ کے خاتمے کیلئے فریقین کے درمیان مذاکرات ہی واحد حل ہے۔جنگ کو ہوا دینا یا جنگ کا طول پکڑنا پورے خطے کے مفاد میں نہیں۔پاکستان میں جنگی خبروں کو بڑھا چڑھا کر پیش کرنے سے اپنا ہی نقصان ہوگا۔

 

زاہد خان نے کہا کہ اس بار بھی اگر ایک منتخب حکومت کوگرانے کی سازش کی گئی تو تباہی پہلے سے زیادہ ہوگی۔ افغانستان میں امن ہوگا تو پاکستانی بھی پرامن زندگی گزارنے کے قابل ہوں گے، ہمیں یہ حقیقت سمجھنی ہوگی۔

 

مرکزی ترجمان اے این پی کا مزید کہنا تھا کہ وہاں پر ہر مکتبہ فکر ایک ساتھ ہیں اور افغان حکومت کی حمایت کررہے ہیں، پاکستان کو اپنی پالیسی واضح کرنی ہوگی۔پاکستان افغان پالیسی بارے گومگوں صورتحال کا شکار ہے لیکن اب مزید یہ ابہاد دور کرنا ہوگا۔دہشت گردی ایک ناسور ہے، خیبرپختونخوا سمیت مختلف علاقوں میں دہشت گردی کے بڑھتے ہوئے واقعات تشویشناک ہیں۔

 

انہوں نے واضح کیا کہ یہ واقعات بتارہے ہیں کہ دہشت گرد ایک بار پھر منظم ہورہے ہیں، اس بار راستہ نہ روکا گیا تو تباہی پہلے سے کئی گنا زیادہ ہوگی۔سلیکٹڈ وزیراعظم، انکے وزرا اور مشیروں کی جانب سے طالبان کی حمایت کرنا انکی اصل ذہنیت کی عکاسی کررہی ہے۔پی ٹی آئی کی اصلیت یہ ہے کہ ایک دہشت گرد کو کشمیر میں رکن قانون ساز اسمبلی بنایا جارہا ہے۔