پاکستان میں فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز بڑی تعداد میں کورونا کا شکار ہونے لگے

پاکستان میں فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز بڑی تعداد میں کورونا کا شکار ہونے لگے

اسلام آباد : پاکستان میں کورونا کیسز میں اضافے کے ساتھ ہی 24 گھنٹوں میں مزید 22 ہیلتھ ورکرز کورونا کا شکار ہوگئے، جس کے بعد متاثرہ ہیلتھ ورکرز کی تعداد 17ہزار199 ہوگئی۔

 

تفصیلات کے مطابق کورونا سے لڑنے والے فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز وائرس کے نشانے پر آگئے، 24 گھنٹے میں ملک میں 22 ہیلتھ ورکرز میں کوروناوائرس کی تصدیق ہوئی ، جس میں 14 ڈاکٹر،3 نرسز، 5 ہیلتھ ورکر شامل ہیں۔

 

ذرائع کا کہنا ہے کہ ملک میں کورونا سے متاثرہ ہیلتھ ورکرز کی تعداد 17ہزار199ہوگئی ، جس میں 10ہزار312ڈاکٹرز، 2430 نرسز، 4457 کورونا سے متاثرہ میں شامل ہیں۔

 

وزارت صحت کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ملک میں تاحال 168 ہیلتھ ورکرز کورونا سے جاں بحق اور16529 ہیلتھ ورکرز کورونا سے صحت یاب ہوچکے ہیں، جبکہ 475 ہیلتھ ورکرز گھر اور 27 اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔

 

ذرائع کے مطابق کورونا سےمتاثرہ،جاں بحق بیشتر ہیلتھ ورکرز کا تعلق سندھ سے ہے، سندھ میں 6009 ہیلتھ ورکرز کورونا مثبت اور 60 جاں بحق ہو چکے ہیں۔

 

اسی طرح پنجاب میں کورونا سے متاثر ہونے والے ہیلتھ ورکرز کی تعداد 3489، کے پی میں 4083، اسلام آباد میں 1584 ، گلگت میں 316 اور بلوچستان میں 864 ہے جبکہ آزادکشمیر میں 854 ہیلتھ ورکرز کورونا پازیٹو ہیں۔

 

اموات کے حوالے سے پنجاب میں اب تک 29 ہیلتھ ورکرز ، کےپی میں 44 ہیلتھ ورکرز، گلگت میں3ہیلتھ ورکرز، بلوچستان میں 9 اور آزادکشمیر میں بھی 9ہیلتھ ورکرز جاں بحق ہوچکے ہیں۔