ڈیرہ، ایران سے آنیوالے442زائرین کا قافلہ درازندہ قرنطینہ سنٹر پہنچ گیا

ڈیرہ اسماعیل خان(نمائندہ شہباز) ایران سے براستہ کوئٹہ اور کوئٹہ سے ڈیرہ اسماعیل خان واپس آنیوالے442زائرین کا قافلہ ڈیرہ اسماعیل خان میں قائم درازندہ قرنطینہ سنٹر پہنچ گیا،240زائرین کو گومل میڈیکل کالج منتقل کر دیا گیا، نئے واپس آنیوالے زائرین میں سے 65سالہ معمر خاتون دل کا دورہ پڑنے سے جاں بحق، گومل میڈیکل کالج میں قائم خصوصی آئیسولیشن وارڈ میں مریضوں کیلئے تمام تر سہولیات موجود ہیں، سیکورٹی کے سخت انتظامات ، آئیسو لیشن سنٹر وارڈ میں تعینات میڈیکل و سیکورٹی سٹاف بھی 15روز تک مخصوص احاطے میں ہی رہے گا، جبکہ گلت اور بلتستان سے بھی کا قافلے روانہ ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق ایران سے آنیوالے زائرین کا قافلہ تفتان بارڈر سے براستہ کوئٹہ اور کوئٹہ سے درازندہ، ڈیرہ اسماعیل خان پہنچ گیا ہے۔ قافلے میں 442زائرین شامل ہیں جن میں سے201 زائرین کا تعلق گلگت بلتستان جبکہ241زائرین کا تعلق صوبہ خیبر پختونخوا کے مختلف علاقوں سے ہے۔نئے واپس آنیوالے 240زائرین کو گومل میڈیکل کالج میں قائم صوبے کے سب سے بڑے قرنطینہ سنٹرمنتقل کر دیا گیا ہے۔ گزشتہ روز ایران سے واپس آنیوالے زائرین میں سے پاڑا چنار کے زائرین سے تعلق رکھنے والی 65سالہ زائر خاتون جاں بحق ہو گئی۔

ذرائع کے مطابق جاں بحق خاتون کی شناخت والدہ شبیر حسین آف پہواڑ پاڑا چنار سے ہوئی ہے جو کئی سالوں ذیابیطس اور دل کے مرض میں مبتلا تھی اور شوگر و بلڈ پریشر کی زیادتی کے باعث اسکی موت واقع ہوئی۔ ضلعی انتظامیہ کے فوکل پرسن ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نور عالم خان محسود نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گومل میڈیکل کالج میں قائم قرنطینہ سنٹر میں کورونا وائرس کے مشتبہ مریضوں کیلئے خصوصی آئیسولیشن وارڈ میں مریضوں کیلئے ہرممکن سہولیات موجود ہیں۔

اس سلسلے میں آئیسولیشن وارڈ میں ڈاکٹروں، پیرا میڈیکل سٹاف اور عملہ صفائی کو خصوصی حفاظتی کٹس فراہم کردی گئیں ہیں جبکہ آئیسولیشن وارڈ کی سیکورٹی کیلئے 120سے زائد پولیس اہلکار بھی تعینات ہیں۔ فوکل پرسن ضلعی انتظامیہ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نور عالم محسود کے مطابق آئیسولیشن وارڈ اور قرنطینہ سنٹر میں تعینات میڈیکل سٹاف، سیکورٹی اہلکاروں سمیت ضلعی انتظامیہ کے دیگر اہلکار بھی 15روز تک مخصوص احاطہ کے اندر ہی رہیں گے اور قرنطینہ سنٹر میں کسی کو آنے یا سنٹر سے باہر جانے کی اجازت نہیں ہے ۔

فوکل پرسن کے مطابق گومل میڈیکل کالج قرنطینہ سنٹر اور درازندہ سنٹر پہنچنے والے زائرین کو ناشتہ ، کھانا اور دیگر تمام سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔ تمام زائرین کی سکریننگ کیلئے انکے پی سی آر ٹیسٹ کیلئے زائرین کے خون اور سیرم کے نمونہ جات پشاور لیبارٹری ارسال کئے جارہے ہیں جہاں سے رپورٹس آنے کے بعد کلیئر ہونیوالے زائرین کو انکے گھروں کو روانہ کردیا جائیگا۔

یہ بھی پڑھیں

سوات، رائیونڈ تبلیغی مرکز سے آئے شخص میں کورونا وائرس کی تصدیق

سوات(نمائندہ شہباز) سوات میں ایک اور شخص میں کوروناوائرس کی تصدیق کے بعد ضلع میں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔