ڈی چوک لیڈی ہیلتھ ورکرز دھرنے کا چھٹا روز، پولیس سے ہاتھا پائی 2 خواتین زخمی

اسلام آباد(آن لائن ) وفاقی دارلحکومت کے ڈی چوک پر لیڈی ہیلتھ ورکرز کا دھرنا چھٹے روز بھی جاری رہا ۔مردان اور خیبرپختونخوا سے لیڈی ہیلتھ ورکرز بھی دھرنے میں پہنچنا شروع ہوگئے ہیں۔ دوسری جانب حکومت نے ایک بار پھر دھرنا مظاہرین سے مذکرات کا فیصلہ کیا ہے ،اب تک مذاکرات کے چھ دور ہوچکے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق لیڈی ہیلتھ ورکرز کی جانب سے پیر کو دن گیارہ بجے پارلیمنٹ کی طرف جانے کا اعلان کیا گیاتھا ۔

صدر لیڈی ہیلتھ ورکر کا کہنا تھا کہ رخسانہ انور کوئی بھی رکاوٹ ہمیں روک نہیں سکتی اس کے بعد لیڈی ہیلتھ ورکرز نے حکومت کو ایک اور ڈیڈ لائن دی جس میں کہا گیا کہ 2 بجے کے بعد پارلیمنٹ کی جانب مارچ کریں گی۔

رخسانہ انور کا کہناتھا کہ چارسدہ، مردان اور دیگر خیبرپختونخوا کی لیڈی ہیلتھ ورکرز کا انتظار ہے،۔باقی ساتھی آئیں گے تو مارچ کریں گے۔حکومت کی جانب سے ابھی تک کوئی جواب نہیں ملا۔

پارلیمنٹ مارچ کی اپنی حکمت عملی بھی طے کر لی ہے، رخسانہ انور کا کہناتھاکہ لیڈی ہیلتھ ورکرز کو ڈی چوک دھرنے کی جگہ پر آنے سے روکا جا رہا ہے۔

پولیس اور مظاہرین کے درمیان ہاتھا پائی بھی ہوئی ۔ دوسری جانب حکومت نے ایک بار پھر دھرنا مظاہرین سے مذکرات کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر پارلیمانی امورعلی محمد خان نے صدر رخسانہ انور سے ٹیلفونک رابطہ کیا اور ایک مرتبہ پھر مذاکرات کی پیشکش کی گئی جس کے بعد لیڈی ہیلتھ ورکرز نے پارلیمنٹ کی طرف مارچ کا فیصلہ موخر کردیا ۔وزیراعظم عمران خان نے مذاکرات کی ذمہ داری علی محمد خان اور پرویز خٹک کو سونپ دی ہے ۔ علی محمد خان نے اس حوالے سے سینٹ میں بھی بیان دیا کہ حکومت مظاہرین کے ساتھ مذاکرات کیلئے تیارہے ،اب تک مذاکرات کے چھ دور ہوچکے ہیں تاہم کوئی پیش رفت سامنے نہیں آسکی ہے ۔

ادھر نیشنل پارٹی کے سینیٹر میر کیبر شاہی نے لیڈیز ہیلتھ ورکرز کے دھرنے میں شرکت کی ۔مظاہرین سے خطاب میں سینیٹر میر کیبر شاہی کا کہناتھاکہ عمران خان عوام کو خواب دیکھایا کہ جب میں آوں گا میں ملازمین کے تنخواہیں بڑھا دونگا۔بجلی کے بل میں اسی چوک میں جلا دیئے۔لیکن بجلی اور گیس کے بلوں کو 200 فیصد اور بڑھا دیئے۔آج پورا پاکستان ایک احتجاج گاہ بن چکا ہے۔

حکومت کا پہلا بجٹ تھا جس میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کا تنخواہیں نہیں بڑھائی۔میں خواتین کے مسلوں کو سننے کے لیے ڈی چوک آیا تھا۔پورے ملک سے خواتین کا ڈی چوک میں دھرنا دینا بڑی شرم کی بات ہے۔

یہ بھی پڑھیں

جے یو آئی کا کورونا فنڈ میں تحریک انصاف کی کرپشن منظر عام پر لانے کا دعویٰ

آڈٹ رپورٹ کے مطابق من پسند افراد کو ٹھیکے دیئے گئے، 6 کروڑ 55 لاکھ …