لورالائی، پی ٹی ایم جلسے میں شرکت کرنے پر پورے خاندان کے شناختی کارڈ زبلاک

لورالائی، پی ٹی ایم جلسے میں شرکت کرنے پر پورے خاندان کے شناختی کارڈ زبلاک

لورالائی (ویب ڈسک)بلوچستان کے ضلع لورالائی کے  ڈپٹی کمشنر نے  پشتون تحفظ تحریک  کے کارکنوں کی جلسے میں مدد فراہم کرنے پر ایک خاندان کے شناختی کارڈز بلاک کردئیے۔

ڈی سی لورالائی نے ایک اشتہار کے ذریعے  رہائشی سردار گل مرجان کبزئی اور اس کے خاندان کے شناختی کارڈز معطل کردیے۔

 بلوچستان سے شائع ہونے والے ایک علاقائی اخبار کو دیے گئے اشتہار میں ڈی سی لورآلائی نے الزام لگایا ہے کہ سردار گل مرجان سرکاری ملازم رہ چکا ہے اور اب انہوں نے ریاست کے خلاف نازیبہ الفاظ اور عوام کو اکسانے کی کوشش کی ہے۔

ڈپٹی کمشنر نے معززپشتون خاندان کے قانونی اور آئینی اسلحہ لائسنس، سرٹیفیکٹس اور شناختی کارڈز منسوخ کردیے۔ سیاسی اور انسانی حقوق کے کارکنوں نے اس عمل کی مذمت کی ہے اس سلسلے میں ممبر نیشنل اسمبلی محسن داوڑ نے ٹوئٹر پیغام میں لکھا ہے کہ ڈپٹی کمشنر نے آقاؤں کو خوش کرنے کے لئے اشتہار جاری کیاہے۔

https://twitter.com/mjdawar/status/1227953487046234112


بشرٰی گوہر نے سوشل میڈیا پیغام میں لکھا ہے کہ پی ٹی ایم جلسے میں شرکت کرنے پر ایک مغزز خاندان کے شناختی کارڈز منسوخ کرنا شرمناک فعل ہے۔ انہوں نے ڈی سی سے نوٹس فوری طور پر واپس لینے کا مطالبہ کیا۔


افراسیاب خٹک نے ٹوئٹر پیغام میں لکھا ہے کہ انسانی حقوق کی اس پامالی کے خلاف پارلیمان اور عدلیہ کو نوٹس لینا چائیے نو آبادیاتی نظام نہیں چلے گا۔

خان زمان کاکڑنے مذکورہ اشہار کو ریاست کی پختونوں سے دشمنی قرار دیتے ہوۓ ٹوئٹر پر لکھا ہے کہ پختون اور پاکستان کے تعلق پر غور کرنے کا ایک اور موقع ہے۔ امن کے لئے ایک اور آواز کوُسزادئ گئ ہے۔

سماجی اور انسانی حقوق کیلئے کام کرنے والے اداروں نے فوری طور پر نوٹس واپس لینے اور ڈی سی کیخلاف کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

Google+ Linkedin

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

*
*
*