افغانستان،طالبان کا حملہ پسپا،13عسکریت پسند مارے گئے

کابل(آئی این پی)مشرقی افغانستان میں بدامنی کا شکار صوبہ پکتیا میں ڈانڈپٹن اور سید کرم اضلاع میں طالبان کے حملے پسپا کردیئے گئے ہیں اورعسکریت پسند اپنے13ساتھیوں کی لاشیں میدان جنگ میں چھوڑ کر فرار ہوگئے ہیں۔

یہ بات فوج کیترجمان عمل محمندنے اتوار کے روز بتائی۔عہدیدار کے مطابق مسلح باغیوں نے ڈانڈپٹن اوراس کے ہمسایہ ضلع سید کرم میں اتوار کی علی الصبح حملہ کردیا جس کے بعد جھڑپیں شروع ہوگئیں جوگھنٹوں جاری رہیں۔محمند نے کہاکہ ڈانڈپٹن میں 9عسکریت پسند ہلاک جبکہ 5زخمی ہوگئے جبکہ سید کرم میں جھڑپوں کے دوران مزید4ہلاک اور ایک زخمی ہو گیا۔

عہدیدار نے سکیورٹی فورسزکاجانی نقصان بتائے بغیر کہاکہ سکیورٹی فورسز پکتیا اور اس کے گردونواح میں باغیوں کیخلاف کارروائیاں جاری رکھیں گی۔طالبان نے تاحال واقعہ پر کوئی بیان جاری نہیں کیا۔

یہ بھی پڑھیں

افغان حکومت کا 600انتہائی خطرناک طالبان قیدیوں کو رہا کرنے سے انکار

کابل(این این آئی ) افغان حکام نے کہاہے کہ وہ امن معاہدے کی شرائط کے …