غلام سرورخان کو عہدے سے ہٹانے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ

اسلام آباد: اسلام آباد ہائیکورٹ نے غلام سرور کو وفاقی وزیر کے عہدے سے ہٹانے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔ چیف جسٹس ہائیکورٹ نے کہا اس حوالے سے تفصیلی حکم نامہ جاری کریں گے۔

اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے وفاقی وزیرغلام سرور خان کو عہدے سے ہٹانے کی درخواست پرسماعت کی۔

درخواستگزار کے وکیل نے موقف اپنایا کہ وفاقی وزیر غلام سرورخان نے 262 پائلٹس غیر ذمہ دارانہ بیان دیا اگرکسی کی ڈگری جعلی تھی خفیہ انداز میں کارروائی کی جانی چاہیئےتھی ،غلام سرور خان کے غیرذمہ دارانہ بیان سے دنیا بھرمیں جگ ہنسائی ہوئی اور پی آئی اے پریورپ میں فلائیٹوں پر6ماہ کی پابندی لگ گئی۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے درخواست پرفیصلہ محفوظ کرتے ہوئے ریمارکس دییئے کہ اس حوالے سے تفصیلی آرڈر پاس کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں

مولانا فضل الرحمن آصف زرداری ملاقات، این ایف سی ایوارڈ ،18ویں آئینی ترمیم پر غیرلچکدار موقف اپنانے پر اتفاق

کورونا وائرس کے دوران وزیراعظم کی نا اہلی کھل کر سامنے آچکی، پہلے ہی کہہ …