وفاقی اداروں میں بلوچستان کے جعلی ڈومیسائل پر60 فیصد ملازمین تعینات

اسلام آباد(عبد اللہ مومند) سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے کیبنٹ سیکرٹریٹ کے اجلاس میں سینیٹر میر کبیر احمد محمد شاہی کے 10 جون 2020 کو سینیٹ اجلاس میں اٹھائے گئے عوامی اہمیت کے معاملہ برائے صوبہ بلوچستان سے تعلق رکھنے والے وفاقی اداروں کے ملازمین کے ڈومیسائل کی تصدیق کے حوالے سے معاملے کا تفصیل سے جائزہ لیا گیا۔

سینیٹر میر کبیر احمد محمد شاہی نے کہا کہ 9 جنوری 2017 کو ایوان بالاء کے اجلاس میں ایک متفقہ طور پر قرارداد منظور کروائی تھی کہ وفاقی اداروں میں صوبہ بلوچستان سے تعلق رکھنے والے ملازمین کے ڈومیسائل کی تصدیق کرائی جائے مگر اُس پر کوئی عملدرآمد نہیں کیا گیا۔اس قائمہ کمیٹی کو بتایا جائے کہ تصدیق کیلئے کتنے ڈومیسائل صوبہ بلوچستان کو بھیجے گئے اور اُس کی رپورٹ کیا ہے ورکنگ پیپر میں جو جواب فراہم کیا گیا اُس میں سوال کچھ اور تھا اور جواب کچھ اور دیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نوکریوں کے علاوہ دیگر معاملات میں بھی صوبہ بلوچستان کے لوگوں کا حق مارا جا رہا ہے بلوچستان کے اداروں میں بھی جعلی ڈومیسائل پر لوگوں نے ملازمتیں حاصل کر رکھی ہیں صرف ضلع مستونگ میں 1200 ملازمین میں سے 400 کے ڈومیسائل جعلی ہیں۔ تمام محکموں میں 60 فیصد لوگ جعلی ڈومیسائل پر کام کر رہے ہیں۔ جس پر اسپیشل سیکرٹری اسٹبلشمنٹ ڈویژن نے کہا کہ 28 اگست 2020 کو تمام وفاقی اداروں کو خطوط لکھیں ہیں مگر ابھی تک کوئی جواب نہیں ملا۔ جس پر چیئرمین کمیٹی سینیٹر طلحہ محمود نے سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ انتہائی اہمیت کا معاملہ ہے کہ 2017 میں متفقہ قرارداد اور سفارشات بھیجی گئیں اور عملدرآمد کے حوالے سے متعدد بار خطوط بھی لکھے گئے مگر جواب فراہم نہیں کیا گیا ادارے پارلیمنٹ کی کمیٹیوں میں مکمل تیار ی سے بریف دیا کریں۔

سینیٹر میر کبیر نے کہا کہ وفاقی اداروں میں صوبہ بلوچستان کے ملازمین کے ڈومیسائل متعلقہ ڈی سی سے تصدیق کیلئے بھیجے جائیں اور ایک مقررہ وقت میں جواب حاصل کئے جائیں۔ قائمہ کمیٹی نے آئندہ اجلاس میں اسٹبلشمنٹ ڈویژن سے ٹی او آر طلب کرتے ہوئے چیف سیکرٹری بلوچستان، چیف سیکرٹری خیبر پختونخواہ، چیف سیکرٹری گلگت بلتستان، سیکرٹری قانون و انصاف کو طلب کر لیا اور ایک ہفتے میں اسٹبلشمنٹ ڈویژن سے پیش رفت رپورٹ بھی طلب کر لی۔

یہ بھی پڑھیں

بلوچستان میں پرائمری اسکولز کھولنے کی تاریخ میں 15 دن کی توسیع کا اعلان

کوئٹہ: بلوچستان حکومت نے پرائمری اسکولز کھولنے کی تاریخ میں 15 دن کی توسیع کا …

%d bloggers like this: