اسلام آبادکے ڈی چوک پر لیڈی ہیلتھ ورکرز کا دھرنا چوتھے روز بھی جاری

اسلام آباد: اسلام آباد کے ڈی چوک پر لیڈی ہیلتھ ورکرز کا مطالبات کی منظوری کے لیے دھرنا چوتھے روز میں داخل ہو گیا۔

ضلعی انتظامیہ نے دھرنے کے شرکا کو پارلیمنٹ ہاؤس جانے سے روکنے کیلئے چاروں اطراف میں کنٹینرز لگادیے جبکہ پولیس کی بھاری نفری بھی تعینات کردی گئی ہے۔ دھرنے کے چاروں اطراف مرد وخواتین پولیس اہلکار تعینات ہیں۔ راستوں کو کنٹینرز اور خاردار تاریں لگا کر بند کیا گیا ہے۔

لیڈی ہیلتھ ورکرز کا کہنا ہے کہ مطالبات کی منظوری تک پیچھے نہیں ہٹیں گی۔

صدر لیڈی ہیلتھ ورکرز رخسانہ انور کا کہنا ہے چاہتے ہیں کہ جلد حکومت کے ساتھ مذاکرات طے پا جائیں، مطالبات نہ مانے گئے تو دھرنا جاری رہے گا۔

رخسانہ انور نے بتایا کہ وزارت صحت نے مذاکرات کے لیے بلایا ہے، سیکرٹری ہیلتھ پنجاب امجد بھٹی مذاکرات کریں گے۔

خیال رہے کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز تنخواہوں میں اضافے، مستقل ملازمت اور انسداد پولیو مہم کے دوران سیکیورٹی فراہم کرنے کے مطالبے پر اسلام آباد میں دھرنا دے رہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

ڈی چوک لیڈی ہیلتھ ورکرز دھرنے کا چھٹا روز، پولیس سے ہاتھا پائی 2 خواتین زخمی

اسلام آباد(آن لائن ) وفاقی دارلحکومت کے ڈی چوک پر لیڈی ہیلتھ ورکرز کا دھرنا …

%d bloggers like this: