ذخیرہ اندوزی اور قیمتوں میں اضافے کا بل مزیدغور کیلئے موخر

امریکی سفارتخانہ ہمارے داخلی امور میں کیوں مداخلت کر رہا ہے،کمیٹی اراکین کی برہمی

اسلام آباد(این این آئی)قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ نے ذخیرہ اندوزی اور قیمتوں میں اضافے کا بل مزید غور کے لئے موخر کر دیا۔ پیر کو راجہ خرم نواز کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں ذخیرہ اندوزی اور پرائس کنٹرول سے متعلق بل کمیٹی میں زیر بحث آیا ۔ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات نے بل پر کمیٹی کو بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ وبا کے دور میں اشیاء کی ذخیرہ اندوزی کرتے ہوئے قیمتوں میں مصنوعی اضافہ کیا گیا۔چیئرمین کمیٹی نے ذخیرہ اندوزی اور قیمتوں میں اضافے کا بل مزید غور کے لئے موخر کر دیا۔

اجلاس کے دور ان ڈی آئی جی آپریشنز اسلام آبادوقار الدین سید نے کمیٹی کو بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ وفاقی دار الحکومت میں گزشتہ چند سالوں سے جرائم میں نمایاں کمی واقع ہو رہی ہے۔وقار الدین سید نے کہاکہ امریکی سفارتخانہ کی طرف سے اسلام آباد میں جرائم سے متعلق جو خدشات ظاہر کئے وہ درست نہیں۔

وقار الدین سید نے کہاکہ امریکی سفارتخانہ کے خدشات سے معاشرے پر منفی اثرات مرتب ہوئے۔انہوںنے کہاکہ امریکی سفارتخانہ سے دفتر خارجہ کے ذریعے تفصیلات مانگی گئی ہیں۔انہوںنے کہاکہ امریکی سفارتخانہ نے مخصوص سیکٹرز میں جرائم سے متعلق رپورٹ دی جو درست نہیں۔کمیٹی ارکان نے امریکی سفارتخانہ کی رپورٹ پر اظہار بر ہمی کیا ۔

کمیٹی نے کہاکہ امریکی سفارتخانہ ہمارے داخلی امور میں کیوں مداخلت کر رہا ہے۔ڈی آئی جی آپریشنز نے کہا کہ امریکی سفارتخانہ نے جن سیکٹرز کی نشا ندہی کی ہے وہاں جرائم کی شرح انتہائی کم ہے۔ڈی آئی جی آپریشنزنے کہاکہ برطانیہ اور فرانس سمیت کئی ممالک کے سفارتخانوں نے اسلام آباد پولیس کی کار کردگی کو سراہا ہے۔ڈی آئی جی آپریشنز نے کہاکہ برطانیہ اور یورپی ممالک نے اسلام باد کو محفوظ شہر قرار دیا ہے۔

وقار الدین سید نے کہاکہ اقوام متحدہ نے اسلام آباد کو فیملی سٹیشن قرار دیا ہے۔ڈی آئی جی آپریشنز نے کہاکہ غیر ملکی سفارتخانوں نے اسلام آباد پولیس کی کاوشوں کو سراہتے ہوئے تعریفی خطوط لکھے ہیں۔وقار الدین سید نے کہاکہ انسداد جرائم اور سیکیورٹی صورتحال کی بہتری پر غیر ملکی سفارتخانوں نے اطمینان کا اظہار کیا ہے۔آئی جی اسلام آباد نے کہاکہ کمیٹی کو سیکیورٹی صورتحال پر ان کیمرہ بریفنگ دینے کو تیار ہیں۔

انہوں نے کہاکہ ملک کے دیگرعلاقوں میں جو کچھ ہوتا ہے اس کا ٹارگٹ اسلام آباد ہوتا ہے۔ڈی آئی جی آپریشنز کے مطابق اسلام آباد پولیس کے عدالتوں میں 18 ہزار سے زائد کیسز ہیں۔ ڈی آئی جی آپریشنز نے کہاکہ 7 ہزار سے زائد کیسز کا ٹرائل جاری ہے۔

یہ بھی پڑھیں

مسئلہ کشمیر کئی دہائیوں سے اقوام متحدہ کا نامکمل ایجنڈا ہے، عمران خان

اقوام متحدہ کو وباء کے باعث کئی چیلنجز کا سامنا کرنا پڑا ، متعدد ریاستوں …

%d bloggers like this: