اے این پی کی پنجاب یونیورسٹی میں پشتون طلباء پر حملے کی مذمت

پشتون طلباء کو تحفظ اور ملوث افراد کیخلاف قانونی کارروائی کی جائے،سیکرٹری جنرل پنجاب

لاہور(نمائندہ خصوصٰ) عوامی نیشنل پارٹی پنجاب نے پنجاب یونیورسٹی میں پشتون طلباء پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو لوگ اس حملے میں ملوث ہیں، انکے خلاف سخت سے سخت قانونی کارروائی کی جائے۔

اے این پی پنجاب کے جنرل سیکرٹری امیربہادرخان ہوتی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پنجاب ہمارا بڑا بھائی ہے لیکن اگر بڑا بھائی غلط رویہ اختیار کرے یا بڑے بھائی کے لبادے میں ایسی حرکت ہو تو اس سے باقی صوبوں کے عوام میں خطرناک تاثر ابھرے گا۔

پشتون طلباء یہاں لڑائی جھگڑوں کیلئے نہیں بلکہ تعلیم حاصل کرنے کیلئے آتے ہیں۔ اے این پی کے صوبائی جنرل سیکرٹری کا کہنا تھا کہ پشتون پہلے ہی ظلم و بربریت اور دہشت گردی کا شکار ہیں، دہشت گردوں نے ہمارے تعلیمی اداروں کو تباہ کردیا ہے، اگر ہم سب ایک پاکستانی ہیں تو خدارا پشتون طالبعلموں کو تعلیم سے دور رکھنے کی سازش کو ناکام بنائی جائے اور انہیں انصاف فراہم کیا جائے۔

یہ بھی پڑھیں

اے این پی بلوچستان کا ’’کورنا پارلیمانی کمیٹی‘‘ کا حصہ بننے سے انکار

کوئٹہ(آن لائن)عوامی نیشنل پارٹی صوبہ بلوچستان کے صدر وپارلیمانی لیڈر اصغر خان اچکزئی نے چیف …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔