مولانا فضل الرحمان کا عید کے بعد ملک گیر احتجاجی تحریک شروع کرنیکا فیصلہ

اسلام آباد لاہور ( آن لائن ) پی ڈی ایم سربراہ مولانا فضل الرحمان سے پختونخوا ملی عوامی پارٹی کے سربراہ محمود خان اچکزئی نے ٹیلی فونک رابطہ کیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق محمود اچکزئی نے مولانا فضل الرحمان کی صحت بارے دریافت کیا جب کہ دونوں رہنماؤں نے موجودہ ملکی صورت حال پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ بتایا گیا ہے کہ دونوں رہنماؤں نے عید کے بعد ملک گیر احتجاجی تحریک شروع کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے اتفاق کیا کہ کوئی ساتھ چلے یا نہ چلے ہم عید کے بعد میدان عمل میں نکلیں گے ، اس حوالے سے محمود خان اچکزئی نے کہا ہے کہ ہمارا مقصد عمران خان کو ہٹانا نہیں موجودہ فرسودہ نظام کی تبدیلی ہے۔

دریں اثناء مولانا فضل الرحمن نے چیئرمین علماء مشائخ فیڈریشن آف پاکستان سفیرامن پیر صاحبزادہ احمد عمران نقشبندی سجادہ نشین آستانہ عالیہ بھیج پیر جٹا ںسے ٹیلیفونک گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آئین کی بالا دستی اور عوامی حقوق کی جنگ لڑ رہے ہیں ،ملک کو اہل دیانتدار، بااعتمادقیادت کیلئے لائحہ عمل کے ذریعے بحرانوں سے نجات دلائیں گے،علماء مشائخ حقیقی تبدیلی کے ضامن ہوتے ہیں انہیں اغیار کے اشاروں پر جعلی مینڈیت والوں کے خلاف میدان میں آنا ہوگا،

مساجدو مدارس کے حوالے سے علما ء و مشائخ کی مشاورت کے بغیربنایاگیاکوئی بھی قانون وپابندیاں قبول نہیں ، وقف املاک ایکٹ کے خلاف ملک گیرتحریک کی ضرورت ہے علما ء و مشائخ کو ایک پیج پر آنا ہوگا، مساجدومدارس کی آزادی پرکوئی سمجھوتا نہیں ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں

پی ٹی آئی کی نااہل حکومت کا دور ختم ہونے والا ہے’امیر مقام

صوابی ( محمد شعیب سے) پاکستان مسلم لیگ ن خیبر پختونخوا کے صدر اور سابق …