کورونا وائرس کیخلاف پشاور کی سڑکوں، مساجد،گلیوں اور بازاروں میں اسپرے کا آغاز

پشاور: خیبر پختونخوا کی حکومت نے کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے حفاظتی اقدامات اٹھانے شروع کر دیئے ہیں۔

اس ضمن میں صوبے کے دارالحکومت پشاور میں تحصیل میونسیپل ایڈمنسٹریشن ( ٹی ایم اے) اور ریسکیو 1122 نے کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے حیات آباد میں تمام مارکیٹوں، سڑکوں اور مساجد کو کلورین ملے پانی سے دھلائی کی ہے۔

پی ڈی اے حکام کی جانب سے شہریوں کو کورونا وائرس سے بچنے کیلئے آگاہی بھی دی جا رہی ہے۔

۔ ڈائریکٹر جنرل پشاور ڈویلپمنٹ اتھارٹی سید ظفر علی شاہ نے حیات آباد کے تمام مارکیٹوں اور سڑکوں کی دھلائی پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہری اپنے صحت کا خیال رکھتے ہوئے اپنے گھروں میں رہیں اور غیر ضروری کاموں کے لئے گھروں سے باہر نہ نکلیں انہوں نے کہا کہ شہری ماسک اور داستانوں (گلوز) استعمال ضرور کریں اور گلے ملنے اور بار بار ہاتھ ملانے سے گریز کیا جائے اسی طرح وائرس سے بچنے کے لئے بلا ضرورت گھر سے نکلنے سے اجتناب کریں۔

دوسری جانب کے پی میں آج کورونا وائرس سے متاثرہ مزید 40 کیسز سامنے آگئے ہیں۔ اس طرح صوبے میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد بڑھ کر 78 ہو گئی ہے۔ نئے کیسز میں   ڈیرہ اسماعیل خان سے 37، پشاور سے دو اور جنوبی وزیرستان سے ایک کیس رپورٹ ہوا ہے۔

محکمہ صحت خیبرپختونخوا کے مطابق صوبے میں 538 مشتبہ کیسز بھی رپورٹ ہوئے ہیں۔

عالمی وبا قرار دیے جانے والے کورونا وائرس سے خیبر پختونخوا میں تین ، سندھ، بلوچستان، پنجاب اور گلگت بلتستان میں ایک ایک شخص جاں بحق  ہوا ہے۔

دستیاب اعداد و شمار کے مطابق ملک میں چھ افراد ایسے بھی ہیں جنہوں نے خطرناک بیماری کو شکست دے کر صحتیابی کا سرٹیفکٹ حاصل کیا ہے۔ عالمی ذرائع ابلاغ کے مطابق دنیا بھر کو متاثر کرنے والا مہلک مرض کورونا 195 ممالک کو اپنی لپیٹ میں لے چکا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی واپسی کیلئے فوری اقدامات کئے جائیں، سردار حسین بابک

پشاور (سٹاف رپورٹر)عوامی نیشنل پارٹی خیبرپختونخوا کے جنرل سیکرٹری و ڈپٹی اپوزیشن لیڈر صوبائی اسمبلی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔