کارکنان حکومت کی جانب سے افواہوں پر کان نہ دھریں،جلسہ ہر صورت ہوگا ،ایمل ولی

انتظامیہ کی جانب سے ٹرانسپورٹرز کو دھمکیاں دینا شرمناک ہے،ہم پوچھنے کا حق محفوظ رکھتے ہیں

پشاور: اے این پی خیبرپختونخوا کے زیر اہتمام پی ڈی ایم جلسہ سے پہلے صوبہ بھر میں موٹر سائیکلز ریلی کا انعقاد کیا گیا۔ پشاور میں موٹر سائیکل ریلی کی قیادت صوبائی ترجمان و ایم پی اے ثمر ہارون بلور نے کی۔

جلسہ عام کے تیاریوں اور انتظامات کے حوالے سے باچا خان مرکز پشاور کے دورے کے موقع پر صوبائی صدر ایمل ولی خان نے کہا کہ کارکنان حکومت کی جانب سے افواہوں پر کان نہ دھریں،جلسہ ہر صورت کیا جائیگا ۔ جلسہ گاہ کے باہر خدائی خدمتگار تنظیم کے رضا کار، پارٹی کارکنوں اور سیاسی ورکرز میں سینیٹائیزرز اور ماسک بھی تقسیم کرینگے۔

ایمل ولی خان نے کہا کہ سلیکٹڈ حکمران تصادم کا ماحول بنانے سے گریز کریں،تمام تر ذمہ داری سلیکٹڈ حکومت پر عائد ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ پشاور کے جلسہ عام نے ابھی سے سلیکٹڈ حکمرانوں کے اوسان خطا کردیے ہیں ،یہ جب پشاور میں لال لال لہرائے گا تو اُن کے ہوش ٹھکانے آجائیں گے اور ان کے ساتھ ساتھ ان کے لانے والوں کو بھی یقین ہوجائیگا کہ پشاور صرف اور صرف اے این پی کا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت ہزار بار سرکاری مشینری اور طاقت کا استعمال کریں جلسہ ہوکر رہے گا

اے این پی کارکنان تمام رکاوٹیں عبور کرکے جلسہ گاہ پہنچیں گے ،سرخ لباس زیب تن کرکے خود چارسدہ سے جلوس کی قیادت کرونگا ،تمام قائدین اپنے اپنے اضلاع سے کارکنان کی قیادت کرتے ہوئے جلسہ گاہ آئیں گے۔

ایمل ولی خان نے اپنی گفتگو میں سرکاری ملازمین کو بھی خبردار کرتے ہوئے کہا کہ سرکاری ملازمین بھی یاد رکھیں کہ وہ ریاست کے ملازم ہیں،کسی قسم کا پریشر نہ لیں ۔انتظامیہ کی جانب سے ٹرانسپورٹرز کو دھمکیاں دینا بھی شرمناک ہے،ہم پوچھنے کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

ایم ٹی آئی آرڈیننس،نجکاری کے ذریعے اپنوں کو نوازا جارہا ہے، میاں افتخار

نوکریاں دینے والوں نے پاکستان سٹیل ملز میں 4500، ریلوے میں 6000افراد کو بے روزگار …