بجلی، اشیائے خوردنی کی قیمتوں میں اضافہ ملک و عوام دشمنی ہے، اے این پی

پشاور:عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک نے بجلی اور دیگر ضروریات زندگی کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے کو ملک دشمنی اور عوام دشمنی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کے ہوش اڑ گئے ہیں اورحکمرانوں کو عام عوام کی تکالیف اور مشکلات کی کوئی خبر ہی نہیں ہے، عوام کی قوت خرید ختم ہوچکی ہے، مسلط کردہ حکومت کے ناقص اقدامات کی بدولت عوام کی چیخیں نکل رہی ہیں،موجودہ حکومت نے عوام کو فاقوں پر مجبور کردیا ہے، معلوم نہیں حکومت عوام سے کس دشمنی کا بدلہ لے رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بے روزگاری اور جرائم کی شرح میں میں روز بروز اضافہ ہو تاجارہا ہے،موجودہ حکومت کے پاس عوام کو دینے کے لئے کچھ بھی نہیں ہے، نااہلوں اورنالائقوں نے ملک و قوم کو تباہ کر کے رکھ دیا ہے، پورے پاکستان میں عوام سراپا احتجاج ہیں اور ہر شعبہ زندگی کے لوگ پریشان اور ذہنی کوفت میں مبتلا ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تبدیلی سرکار نے بدترین حکمرانی کی مثال قائم کردی ہے، نالائقوں سے اشیا ضروریہ کے نرخ بے قابو ہوچکے ہیں، نااہل حکومت کو عوام کی بددعائیں لگی ہیں اور ان سے عوام کے مفاد اور فلاح کے کام کی توقع عبث ہے۔

انہوں نے کہا کہ کپتان صاحب کو پتہ ہونا چاہیئے کہ ڈی چوک میں جوشیلے تقاریر اور حکومت چلانے میں بہت فرق ہوتا ہے، کپتان کو قوم پر مسلط کرنے والوں کو سوچنا چاہیئے کہ ایک غیر سیاسی اور غیر متعلقہ شخص ملک کا نظم و نسق کس طرح چلا سکتا ہے؟

انہوں نے مزید کہا کہ سلیکٹڈ وزیر اعظم وزارت عظمی کے منصب کے ساتھ ناانصافی کر رہا ہے اور ملک کی تاریخ میں یہ پہلی مرتبہ ہورہا ہے کہ ایک شخص وزیر اعظم کے منصب پر فائز ہوتے ہوئے بھی اپوزیشن لیڈر کا کردار ادا کررہا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

فاٹا سٹوڈنٹس فیڈریشن کی 3دن بعد پشاور میں دھرنا دینے کی دھمکی

مطالبات منظور نہ ہوئے تو دھرنے سمیت عدالت سے بھی رجوع کردیں گے، مرکزی صدر …