صوابی‘دیرینہ دشمنی پر 2 افراد قتل، ملزمان واردات کے بعد فرار

پولیس نے مقتول قیصر علی کے بھائی کی رپورٹ پر مقدمہ درج، تفتیش شروع کردی

صوابی( نمائندہ شہباز)موضع زیدہ میں پرانی دشمنی کی بناء پر 2افراد کو قتل کر دیا گیا پولیس تھانہ زیدہ کی رپورٹ کے مطابق ایس ایچ او اکبر علی خان، اے ایس آئی اسد زمان اور دیگر نفری پولیس پارٹی کو دوران گشت زیارت لار چم زیدہ میں ایک لاوارث قتل شدہ نعش ملی بعدا زاں دوسری نعش بائی پاس روڈ سے ملی‘ پوسٹمارٹم اور شناخت کیلئے پولیس نے باچا خان میڈیکل کمپلیکس شاہ منصور منتقل کیا بعد ازاں اویس خان ولد فرید خان نے ہسپتال آکر لاش کی شناخت کرلی جو انکے بھائی قیصر علی کی تھی

اویس خان نے تھانہ زیدہ میں ایف آئی آر درج کراتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ رات وہ اپنے بھائی قیصر علی ، رشتہ دار رشید علی عرف کانے ، عمر خیام ولد رشید علی عرف کانے اور انیس الرحمن کے ہمراہ دعوت طعام کے سلسلے میں اویس اور حمزہ پسران عزیز الحسن کے ڈیرے پر جارہے تھے کہ مچھلی چوک کے مقام پر مبینہ طور پر کفایت شاہ اور فواد علی شاہ ساکنان زیدہ نے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ اسلحہ کے زور پر ان کے بھائی قیصر علی اور رشتہ دار رشید علی عرف کانے کو زبردستی اٹھا کر اپنے ساتھ موٹر کار میں نامعلوم مقام پر لے گئے ‘ بعد ازاں اطلاع ملی کہ برادر قیصر علی کی نعش مقامی پولیس کو زیارت چم سے ملی

رپورٹ میں وجہ عناد یوں بیان کی ہے کہ ملزمان اور ہمارے مابین قتل مقاتلہ کی دشمنی چلی آرہی تھی‘ ڈی پی او صوابی عمران شاہد نے اس واقعہ کا نوٹس لے کر ڈی ایس پی شوکت خان ، ایس ایچ او تھانہ زیدہ انسپکٹر اکبر علی خان اور تفتیشی آفیسر اے ایس آئی اسد زمان پر مشتمل ایک ٹیم تشکیل دی جنہوں نے موقع سے شواہد اکٹھے کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

وانا، انتظامی محکموں میں اختیارات پر اختلاف، شہری تذبذب کا شکار

جنوبی وزیرستان میں مقامی سطح پر محکمہ پولیس، ضلعی انتظامیہ اور سکاؤٹس فورس کے اندورنی …