کوہاٹ میں 2 افراد کی ٹارگٹ کلنگ، چارسدہ میں دیوار تنازعہ پر 2 لڑکیاں قتل

کوہاٹ(نمائندگان شہباز)خیبر پختونخوا کے ضلع کوہاٹ میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے 2افراد جاں بحق ہوگئے، دونوں افراد کا تعلق اہل تشیع مسلک سے بتایا جا رہا ہے۔ کوہاٹ میں پشاور چوک کے قریب واقع بشیر میڈیکوز میں سید ارتضٰی حسن اور سید علی حسن موجود تھے کہ نامعلوم مسلح افراد نے دکان کے اندر داخل ہوکر فائرنگ کی۔ انتہائی قریب سے ہونے والی فائرنگ کی زد میں آکر دونوں افراد سید ارتضیٰ حسن اور سید علی حسن موقع پہ ہی جاں بحق ہوگئے۔

دونوں افراد کا تعلق ہنگو کے علاقے ابراہیم زئی سے تھا۔ ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کے مطابق فائرنگ کا واقعہ میڈیکل سٹور کے اندر پیش آیا۔ میتوں کو پوسٹمارٹم کی غرض سے ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

دوسری جانب ابراہیم زئی قبائل میں اس سانحہ کے خلاف شدید غم و غصہ پایا جا رہا ہے۔ دہرے قتل کے اس سانحہ کے خلاف علاقہ مکینوں نے شدید احتجاج کرتے ہوئے سڑک کو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کیا

۔دریں اثناء چارسدہ میں دیوار کے تنازعہ پر فائرنگ سے 2 لڑکیاں جاں بحق جبکہ خاتون سمیت 2 افراد شدید زخمی ہو گئے۔

پولیس کے مطابق چارسدہ کے دیہی علاقہ میرہ ترنگزئی میں دیوار کے تنازعہ پر رشتہ داروں میں فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس کے نتیجے میں 2 لڑکیاں جاں بحق جبکہ خاتون سمیت 2 افراد شدید زخمی ہوئے۔

وقوعہ کے بعد ملزمان فرار ہو گئے تاہم پولیس کی جانب سے کسی طرح کی کارروائی کی اطلاعات تاحال موصول نہیں ہوئی ہیں بلکہ متاثرہ خاندان نے الزام عائد کیا ہے کہ تھانہ خانماہی پولیس بھی ملزمان کو پکڑنے کی بجائے ان کا ساتھ دے رہی ہے۔

زخمیوں میں ایک بیٹا عمران اور اس کی بہن جبکہ جاں بحق افراد میں عمران کی چھوٹی بہن اور منگیتر شامل ہیں،زخمی عمران کے مطابق ملزمان علاقہ میں اب بھی موجود ہیں جس سے ان کی زندگی کو شدید خطرہ لاحق ہے۔متاثرہ خاندان نے وزیراعظم عمران خان اور آئی جی پی خیبرپختونخوا سے انصاف کی فراہمی کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

149 انکاری والدین نے بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلوادیئے

لکی مروت(نمائندہ شہباز)ضلعی انتظامیہ نے محکمہ صحت کی طرف سے تعاون کا ہاتھ بڑھاتے ہوئے …

%d bloggers like this: