ضلع خیبر میں چار نیٹو گاڑیاں نذر آتش

باڑہ: قبائلی ضلع خیبر کے علاقے باڑہ میں نیٹو فوجی گاڑیاں لے جانے والے دو ٹرالر پر نامعلوم عسکریت پسندوں کے راکٹ حملےمیں نیٹوں کی چار گاڑیاں جل کر خاکستر ہوگئیں۔

مقامی انتظامیہ کے مطابق باڑہ میں فرنٹیر روڈ پر عزیز مارکیٹ کے قریب نامعلوم افراد نے نیٹو افواج کی گاڑیاں واپس لے جانے والے دو ٹرالر پر راکٹ داغے جس کے نتیجے میں نیٹو کے چاروں جیب مکمل طور پر تباہ جبکہ ٹرالروں کو جزوی طور پر نقصان پہنچا ہے۔

حکام کے مطابق راکٹ حملے کا نشانہ نیٹو کی گاڑیاں تھیں، آگ لگنے کے بعد دونوں گاڑیوں کے ڈرائیوروں نے بمشکل اپنی جانیں بچائیں۔

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ریسکیو 1122 کے اہلکار موقعہ پر پہنچ گئے اور آگ پر قابو پالیا۔

خیال رہے کہ ماضی میں ملک بھر بالخصوص پشاور اور ضلع خیبر کے مختلف مقامات پر عسکریت پسندوں نے افغانستان میں تعینات نیٹو فورسز کیلئے سامان رسد لے جانے والے سینکڑوں کنٹینروں پر حملے کرکے تباہ  کردیے ہیں۔

اس حملے کی ذمہ داری تاحال کسی گروپ نے قبول نہیں کی ہے تاہم دفاعی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ کالعدم شدت پسند تنظیموں نے اپنی حکمت عملی تبدیل کی ہے جس کے باعث نہ صرف خیبر پختونخوا بلکہ ملک بھر میں دہشت گردی اور تشدد کے واقعات میں اضافہ ہوتا جارہاہے۔

یاد رہے کہ گذشتہ روز بھی شمالی وزیرستان کے علاقے رزمک میں شدت پسندوں نے سیکیورٹی فورسز کے ایک قافلے پر دیسی ساختہ ریموٹ کنڑول ڈیوائس (آئی ای ڈی) سے حملہ کیا تھا جس میں ایک کیپٹن سمیت 6  اہلکار جاں بحق ہوگئے تھے۔

یہ بھی پڑھیں

صوبے میں امن و امان کو برقرار رکھنے پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا، محمود خان

صوبہ میں سرمایہ کاروں کی حوصلہ افزائی کے لئے مختلف ٹیکسوں میں چھوٹ کے علاوہ …

%d bloggers like this: