بونیر، غیرت کے نام پر والد کے ہاتھوں بیٹا اور بہو قتل

بونیر (نمائندہ شہباز) ضلع بونیر کی تحصیل ڈگر کے گاؤں نوائے کلے میں ایک شخص نے سوشل میڈیا پر قابل اعتراض ویڈیو وائرل ہونے پر اپنے 18 سالہ بیٹے اور 17 سالہ بہو کو قتل کردیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ فائرنگ کے واقعے میں قتل ہونے والے شخص کا باپ ملوث ہے جس نے غیرت کے نام پر فائرنگ کرکے اپنے بیٹے اور بہو کو قتل کیا ہے۔

پولیس نے موقف اختیار کیا ہے کہ قتل ہونے والے جوڑے کی ایک ماہ قبل ہی شادی ہوئی تھی، جس کے بعد دونوں کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی۔

پولیس نے بتایا کہ ملزم کو شام میں نماز کے بعد مسجد میں کسی نے ان کے بیٹے اور بہو کی ‘قابل اعتراض ویڈیو’ کے بارے میں بتایا جس کی وجہ سے وہ طیش میں آیا اور معاملے کو غیرت کا مسئلہ بناکر بیٹے اور بہو کو فائرنگ کرکے قتل کردیا۔

پولیس نے لاشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتال ڈگر منتقل کردیا جہاں بعد ازاں لاشوں کو رشتے داروں کے حوالے کردیا گیا۔

ادھر لڑکی کی والدہ نے ڈگر پولیس کو بتایا کہ 2 بھائیوں سمیت خاندان کے متعدد لوگ ان کی بیٹی اور داماد کے قتل میں ملوث ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ بعد ازاں مرد گھر گیا اور خاندان کے دیگر افراد کے ساتھ مشاورت کے بعد یہ انتہائی قدم اٹھایا۔

پولیس نے فرسٹ انفارمیشن رپورٹ (ایف آئی آر) درج کرکے ملزم کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارنا شروع کردیئے۔

یہ بھی پڑھیں

کورونا پھیلاو، حکومت کا پشاور میں 30 بازاروں کو سیل کرنیکا فیصلہ

پشاور (آن لائن) خیبر پختونخوا حکومت نے کرونا وائرس کے تیزی سے پھیلنے کے خطرات …

%d bloggers like this: