باجوڑ،8ہزار خصوصی افراد کیلئے کوئی ایجوکیشن کمپلیکس موجود نہیں

تنظیم بحالی معذوران باجوڑ کی جانب سے خصوصی افراد کا عالمی دن منایاگیا ، الخدمت فائونڈیشن کی جانب سے وہیل چیئرز تقسیم، مقررین کا حکومت وقت سے خصوصی افراد کے مسائل حل کرنے کا مطالبہ

باجوڑ(نمائندہ شہباز) تنظیم بحالی معذوران باجوڑ کی جانب سے خصوصی افراد کا عالمی دن منایاگیا ،الخدمت فاؤنڈیشن کی جانب سے وہیل چیئرز تقسیم کئے گئے۔ اس سلسلے میں ایک تقریب نیوسبزی منڈی میں منعقد ہوا۔ تقریب کے مہمان خصوصی جماعت اسلامی کے صوبائی نائب امیر صاحبزادہ ہارون الرشید تھے ۔

تقریب میں جماعت اسلامی کے نائب ضلعی آمیر پروفیسر(ر) عبدالرقیب ،اے این پی کے ورکر سخی بہادر ، الخدمت فاؤنڈیشن کے ضلعی صدر خلیل اللہ جان ،تنظیم کے چیئرمین حضرت ولی شاہ ، ملک ذاکر اللہ ، حبیب اللہ قاسمی ، قاسم خان ، جاوید رحمن تندر اور دیگرخصوصی افراد کی ایک بڑی تعداد موجود تھے ۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سابق ایم این اے و رہنماء جماعت اسلامی ہارون الرشید ، تنظیم کے چیئرمین حضرت ولی شاہ،سخی بہادر سمیت دیگر مقرر ین نے خصوصی افراد کے مسائل پر روشنی ڈالی اورکہا کہ باجو ڑمیں 8ہزار خصوصی افراد کیلئے کوئی سپیشل ایجوکیشن کمپلیکس موجود نہیں ہیں ۔

انہوں نے حکومت وقت سے خصوصی افراد کے مسائل حل کرنے کا مطالبہ کیا ۔ ا نہوں نے کہا کہ خصوصی افراد ہمارے معاشرے کا ایک اہم حصہ ہے۔ ان کے بحالی ، ان کو عزت کا مقام دینا اور ان کے مسائل کا حل ہماری مشترکہ ذمہ داری ہیں۔

تقریب کے موقع پر خصوصی افراد نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ضلع باجو ڑمیں خصوصی افراد کیلئے منظور کی گئی اسپیشل ایجوکیشن کمپلیکس پر کام کا آغاز کیاجائے ، وزیر اعلیٰ کے اعلان کے مطابق سرکاری ملازمتوں میں 4 فیصد کوٹہ دیاجائے،محکمہ تعلیم باجوڑ میں عدالتی فیصلے کے مطابق خصوصی افراد کو بھرتی کیاجائے ، مفت تعلیم کا بندوبست کرنے، قومی و صوبائی اسمبلی میں خصوصی افراد کیلئے نشستیں دی جائیں، سویٹ ہوم کے طرز پر پاگل افراد کیلئے پاگل خانے کی قیام ، 2014میں گورنر کی جانب سے اعلان کردہ ایک کروڑ روپے ریلیز کرنے سمیت دیگر مطالبات شامل تھے ۔

تقریب کے موقع پر الخدمت فاؤنڈیشن باجوڑ کی جانب سے خصوصی افراد میں وہیل چیئرز تقسیم کئے گئے ۔ جبکہ بہترین کارکردگی پر تنظیم بحالی معذوران کی جانب سے شیلڈز بھی تقسیم کی گئی ۔ دریں اثناء ایک بیان میں قوت سماعت سے معذور باجوڑ کے طلبہ کے استاد قاری ابوبکر آف صدیق آباد پھاٹک نے خیبر پختونخواہ حکومت سے مطالبہ کیاہے کہ ضلع باجوڑ میں قوت سماعت سے معذور افراد کو تعلیم دینے کیلئے کوئی سکول موجود نہیں ہیں جبکہ خیبرپختونخواہ کے دیگر اضلاع میں قوت سماعت سے معذورافراد کیلئے سپیشل سکولز قائم ہیں جہاں پر ان افراد کے تعلیم وتربیت کا بندوبست ہے لیکن افسوس کی بات ہے کہ ضلع باجوڑ میں 300قوت سماعت سے معذور افراد موجود ہیں لیکن ان کیلئے کوئی سکول قائم نہیں ہیں ۔

قاری ابوبکر نے وزیر اعلیٰ محمود خان اور دیگر حکام سے مطالبہ کیا کہ ضلع باجوڑ میں قوت سماعت سے معذور افراد کیلئے سپیشل سکول قائم کیا جائے ۔

یہ بھی پڑھیں

فارن فنڈنگ کیس انتہائی اہم، بغیر دباؤ کے میرٹ پر فیصلہ کیا جائیگا، الیکشن کمیشن

اسلام آباد (این این آئی)ترجمان الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ کمیشن فارن فنڈنگ کیس …