آئی سی سی پول میں عمران خان بہترین کپتان قرار

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے اپنے سروے میں وزیراعظم عمران خان کو سب سے بہترين کپتان قرار دے دیا۔

نٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی جانب سے ’پیس سیٹرز‘ کے عنوان سے کروائی گئی پولنگ میں عمران خان فاتح قرار پائے۔

عمران خان نے 47 فیصد ووٹ حاصل کرتے ہوئے بھارتی کپتان ویراٹ کوہلی کو شکست دی، جنہوں نے 46 فیصد ووٹ حاصل کیے۔

آئی سی سی نے جن چار کرکٹرز کے نام دیے ہیں ان میں انڈیا کے ویرات کوہلی، جنوبی افریقہ کے اے بی ڈی ویلیئرز، آسٹریلوی خاتون کرکٹر میگ لیننگ اور پاکستان کے سابق کپتان عمران خان شامل تھے۔

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے منگل کے روز ٹویٹ کی جس میں تین مرد اور ایک خاتون کرکٹر کو شامل کرتے ہوئے لکھا کہ یہ وہ کرکٹر ہیں جن کی بیٹنگ یا بالنگ اوسط، کپتان بننے کے بعد بہتر ہوئی ہے۔

اس پولنگ میں پانچ لاکھ 36 ہزار 346 لوگوں نے حصہ لیا۔

آئی سی سی نے پولنگ میں لوگوں سے کہا کہ وہ یہ فیصلہ کریں کہ ان چاروں میں سے کس نے کپتان بننے کے بعد بہترین کارکردگی دکھائی ہے۔

آئی سی سی نے اپنی ٹویٹ میں ان چاروں کرکٹرز کے جو اعداد و شمار دیے ان کے مطابق عمران خان کپتان بننے سے قبل ٹیسٹ میں بیٹنگ میں 25.43 کی اوسط رکھتے تھے جبکہ بولنگ میں ان کی اوسط 25.53 تھی۔ لیکن کپتان بننے کے بعد ان کی بیٹنگ اوسط میں کمال بہتری آئی اور وہ 52.34 ہوگئی جبکہ بولنگ اوسط میں بھی نمایاں کمی ہوئی اور وہ 20.26 فیصد ہو گئی۔

وراٹ کوہلی کی بیٹنگ اوسط عام کھلاڑی کی حیثیت سے 51.29 فیصد تھی جو کپتان بننے کے بعد 73.88 فیصد ہو گئی ہے۔

اے بی ڈی ویلیئرز جو اپنی پاور ہٹنگ کی وجہ سے مشہور ہیں، ان کی کپتان بننے سے پہلے ون ڈے کی بیٹنگ اوسط جو 45.97 فیصد تھی، کپتان بننے کے بعد وہ 63.94 فیصد ہو گئی تھی۔

میگ لیننگ کی ون ڈے کی بیٹنگ اوسط کپتان بننے سے قبل 43.87 فیصد تھی، جس میں کپتان بننے کے بعد بہتری آئی اور وہ 60.93 ہو گئی۔

یہ بھی پڑھیں

لارڈز میں کھلاڑیوں کو کورونا ویکسین لگانے کا کیمپ، ظہیر عباس نے بھی ویکسین لگوائی

کرکٹ کے گھر لارڈز میں کھلاڑیوں کو کورونا ویکسین لگانے کا کیمپ قائم کر دیا …